حضرت عمارہ بن حزم

حضرت عمارہ بن حزم رضی اللہ تعالیٰ عنہ

حضرت عمارہ بن حزم رضی اللہ تعالیٰ عنہ نبی کریم خاتم النبیین حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کے جانثار صحابی ہیں ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ غزوہ بدر ، غزوہ احد ، غزوہ خندق ، غزوہ تبوک سمیت تمام غزوات میں شریک ہوئے ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ انصاری صحابی ہیں۔

آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کا نام عمارہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ ہے ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کا سلسلۂ نسب یہ ہے حضرت عمارہ بن حزم رضی اللہ تعالیٰ عنہ بن زید ؛ بن لوذان ؛ بن عمرو ؛ بن عبد عوف ؛ بن غنم ؛ بن مالک ؛ بن نجار ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ کی والدہ کا نام خالدہ ہے۔

آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے لیلۃ العقبہ میں 70 انصار کے ساتھ بیعت کی۔
آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی حضرت محرز بن نضلہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے اخوت ہوئی۔ فتح مکہ میں بنو مالک بن نجار کا علم آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے پاس تھا۔

حضرت عمارہ بن حزم رضی اللہ تعالیٰ عنہ مرتدین کے خلاف جہاد میں حضرت خالد بن ولید رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے ہمراہ تھے ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ مسیلمہ کذاب کے ساتھ جنگ میں شہید ہو گئے ۔

آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ جھاڑ پھونک کا منتر جانتے تھے ۔ نبی کریم راحۃ العاشقین حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم نے فرمایا ذرا مجھ کو تو سناؤ ۔ آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے سنایا چونکہ منتر میں شرک کے الفاظ نہیں تھے ۔ اس لیے آپ نے منتر پڑھنے کی اجازت دے دی لہذا آپ رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے خاندان میں عرصہ تک وہ منتر منتقل ہوتا رہا اور لوگ اس سے فائدہ بھی اٹھاتے رہے ۔

یہ بھی پڑھیں
حضرت عمران بن حصین رضی اللہ تعالیٰ عنہ

حضرت عمارہ بن حزم رضی اللہ تعالیٰ عنہ” ایک تبصرہ

Leave a Reply