آملہ کے طبی فوائد

آملہ کے طبی فوائد

آملہ میں وٹامن سی کا خزانہ چھپا ہوتا ہے ۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ ایک درجن مالٹوں میں جس قدر وٹامن سی ہوتا ہے وہ صرف ایک لیموں میں پایا جاتا ہے جب کہ ایک بڑے آملے میں 13 لیموؤں جتنا وٹامن سی پایا جاتا ہے ۔ آملے میں کیلشیم بھی پایا جاتا ہے ۔ یہ بیکٹیریا کو تلف کرنے کا باعث بھی بنتا ہے ۔

آنکھوں کے مختلف امراض میں آملے کا استعمال بے حد مفید ہوتا ہے ۔ اگر آنکھوں میں جلن اور کھجلی ہو یا نظر کمزور ہو تو آملے کو موٹا کوٹ کر اس کا سفوف بنا لیں ۔ اس سفوف کا ایک چمچ رات کے وقت ایک گلاس پانی میں بھگو دیں اور صبح کے وقت ململ کے کپڑے سے چھان کر اس پانی سے آنکھیں دھو لیں ۔

آملے کو صحت و تندرستی اور طویل عمر کا کیپسول کہا جاتا ہے ۔ ماہرین کہتے ہیں کہ ایک آملہ ہر روز کھانے والے افراد ہر مرض سے محفوظ رہتے ہیں اور 90 سال کی عمر تک بھی چاق و چوبند اور تندرست رہ سکتے ہیں ۔ آملے کا استعمال بڑھاپے کی عمر میں بھی توانائی فراہم کرتا ہے ۔ اس سے جسم میں قوت مدافعت پیدا ہوتی ہے ۔ انسان مختلف اقسام کے انفیکشنز سے محفوظ رہتا ہے ۔

سر چکرانے اور آنکھوں کے گرد اندھیرا چھاجانے کی صورت میں دس گرام آملہ اور دس گرام خشک دھنیا رات کے وقت پانی میں بھگو دیں ، صبح اس پانی کو چھان کر پی لیں ۔ اس میں تھوڑی سی چینی ملا کر پیا جا سکتا ہے ۔

آملے کے سفوف میں تھوڑا سا نمک ملا کر دانتوں پر منجن کی طرح مل لیں ۔ اس سے دانتوں کا میل کچیل صاف ہو جائے گا ۔ دانت بھی مضبوط ہوں گے اور مسوڑھوں سے بھی خون آنا بند ہو جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں
گل انار کے طبی فوائد

Leave a Reply