جن،بھوت، گلاس اور سیاست کی بھول بھلیاں

‏جن،بھوت، گلاس اور سیاست کی بھول بھلیاں

اسپیشل رپورٹ:( عمر بھنڈر ) ان دنوں پاکستانی سیاست میں جن ، بھوت اور چڑیلوں کا ذکر کچھ زیادہ ہی ہو رہا ہے۔ سیاستدان ہر روز جلسوں ، پریس کانفرنسز ، میڈیا ٹاکس اور مختلف ٹی وی پروگرامز میں گفتگو کر رہے ہوتے ہیں۔ گزشتہ دنوں مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز شریف نے ڈی جی آئی ایس آئی کی تعیناتی کے معاملہ پر جنات اور بھوتوں کا ذکر کیا ۔ مریم نواز شریف کا کہنا تھا کہ ‏فوج کے اعلی افسران کی تقریریاں وزیراعظم نہیں ادارے نہیں کررہے بلکہ انکی تقرریاں جن بھوت کررہے ہیں۔تقرریاں اس بات پر ہورہی ہیں کہ فلاں کا نام ع سے یا ن سے یا ف سے شروع ہوتا ہے ۔

سیاست میں جادو ٹونے، جن بھوتوں کے معاملے پر سنئیر صحافی ہارون رشید نے نجی ٹی وی چینل کے پروگرام سیاستدانوں کے دلچسپ واقعات شئیر کئے، سنیئر صحافی نے سوال اٹھایا کہ مریم نواز کے گلاس کے پیچھے کیا کہانی ہے؟ وہ ہر جگہ اتنا لمبا گلاس لئے گھومتی ہیں۔


ہارون رشید نے سابق وزیر اعظم پاکستان بے نظیر بھٹو کا بھی واقعہ سناتے ہوئے سوال کیا کہ بے نظیر نے ننگے پاؤں راوی کا پل کیوں پارکیا؟ اس کے علاؤہ ہارون رشید نے صدر ن لیگ شہبازشریف سے متعلق بھی بات کہی کہ ہمیں سب پتا ہے کہ شہبازشریف نے 10 ہزار روپے میں تعویذ کیوں لیا تھا؟ نواز شریف کس کے پاس جاتے تھے؟
ہارون رشید کا کہنا تھا کہ انہیں یہ پتا ہے کہ آصف زرداری سمندر کے پاس کیوں نہیں جاتے تھے؟
عامر لیاقت حسین کا اس معاملے پر کہنا تھا کہ “‏مریم صاحبہ ہم نےآپ کے گھر کی عورتوں کو جو سیاست میں نہیں کچھ نہیں کہا بشری بھابھی ہماری ماں جیسی ہیں .
عامر لیاقت حسین کا کہنا تھا کہ میں پارٹی سے الگ ہواہوں لیکن خان صاحب اور بھابھی کی عزت کے لیے کھڑا ہوںُ ،وہ جادو ٹونہ کرتیں تو گھر سے بھاگنے والی پر اس کا زیادہ اثر ہوتا کہاں پاک پتنُ کی درویش اور کہاں جھوٹی جعلساز۔۔

Leave a Reply