اس ملک میں مذہب کے نام پر کسی کو بدمعاشی نہیں کرنے دیں گے: علامہ طاہر اشرفی

اس ملک میں مذہب کے نام پر کسی کو بدمعاشی نہیں کرنے دیں گے: علامہ طاہر اشرفی

ہم دوست نیوز ( اسلام آباد ): وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے مذہبی امور مولانا طاہر اشرفی کا کہنا ہے کہ اس ملک میں کسی کو بھی مذہب کے نام پر بدمعاشی نہیں کرنے دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ سری لنکن شہری کے قتل کے واقعے میں ملوث افراد کو پتا ہی نہیں کہ توہین رسالتﷺ کیا ہے۔

تفصیل کے مطابق انہوں نے کہا کہ ہم اپنے بچوں کو خوفزدہ پاکستان نہیں دیں گے ، اب قائد اعظم کا پاکستان بنائیں گے جو ہمارا بھی ہے اور اقلیت کا بھی ہے ، رمشا مسیح پر پاکستان کونسل نے کہا تھا کہ یہ ہماری بیٹی ہے ، یہ چند انتہا پسندوں کا ملک نہیں یہ کروڑوں اعتدال پسندوں کا ملک ہے ، ہمارے رہنماؤں کو ایسی گفتگو کرنے سے باز رہنا چاہیے۔

مولانا طاہر اشرفی کا مزید کہنا تھا کہ ہم کسی قاتل کے ساتھ کھڑے نہیں ہوسکتے قاتل قاتل ہے، سانحہ سری لنکن پر پھر موقع ملا ہے کہ ہم ایک ہوں اور نیشنل ایکشن پلان پر عمل کریں۔ میں شرمندہ ہوں۔ پوری قوم کے سامنے گوجرانولہ کے حافظ قرآن سے اور سری لنکن تک سے معافی مانگتا ہوں۔ پاکستان میں اپنے مقاصد کے لیے توہین رسالتﷺ کا جھوٹا الزام لگانے والے کو بھی اسی قانون کے تحت سزا دی جائے۔

Leave a Reply