پل ٹوٹ گیا

بلوچستان: بارشوں کا نیا سلسلہ، قومی شاہراہ بہہ گئی، پل ٹوٹ گیا

بلوچستان:(ہم دوست نیوز) بلوچستان میں مون سون بارشوں کا نیا اسپیل داخل ہونے کے بعد صوبے میں وسیع پیمانے پر بارشوں کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔

شیرانی، سبی ، ہرنائی، کوہلو ، بولان، ڈیرہ بگٹی، موسیٰ خیل ، بارکھان اور لسبیلہ میں موسلا دھار بارشوں سے جل تھل ایک ہو گئے ہیں،لسبیلہ میں قومی شاہراہ بہہ گئی جبکہ بولان میں پل ٹوٹ گیا۔

مالی حالات بہتر ہوئے تو مزید ریلیف فراہم کریں گے، وزیر اعظم کی

بلوچستان میں جمعرات سے مون سون بارشوں کے نئے سلسلے کا آغاز ہو گیا ہے جبکہ بارشوں کی وجہ سے صوبے کے بیشتر اضلاع کے ندی نالوں میں طغیانی آ گئی ہے۔

بولان ندی میں سیلابی ریلے نے مچ شہر کو قومی شاہراہ سے ملانے والے پل کو توڑ دیا ہے ،جس کی وجہ سے مچ کا زمینی رابطہ منقطع ہو گیا۔اس کے علاؤہ دریائے ناڑی میں اونچے درجے کے سیلاب سے سبی اور اس کے گرد و نوح کی آبادی کو خطرہ لاحق ہو گیا۔

لسبیلہ میں سیلابی ریلے سے کوئٹہ ، کراچی شاہراہ کا ایک حصہ بہہ گیا ہے ،جبکہ ہرنائی میں بارشوں کی وجہ سے کوئٹہ ہرنائی شاہراہ پر ٹریفک معطل ہو گیا۔

شیرانی، کوہلو ،ڈیرہ بگٹی، موسیٰ خیل، بارکھان اور کوہِ سلیمان پر بھی بارشوں کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

محکمہ موسمیات کے مطابق آج سبی، ڈیرہ بگٹی، بولان ، نصیر آباد، خضدار، جھل مگسی، قلات، ژوب، لسبیلہ، بارکھان، تربت، مکران، آواران، پنجگور، پسنی، اورماڑا، جیوانی اور گوادر میں تیز ہواؤں اور گرج چمک کے ساتھ موسلا دھار بارشوں کی توقع ہے۔

بلوچستان: بارشوں کا نیا سلسلہ، قومی شاہراہ بہہ گئی، پل ٹوٹ گیا” ایک تبصرہ

Leave a Reply