ضلع ٹھٹہ

ضلع ٹھٹہ

ضلع ٹھٹہ صوبہ سندھ پاکستان کا ایک ضلع ہے ۔ یہ سندھ کے جنوبی علاقے میں واقع ہے ۔ دریائے سندھ یہیں سے گزرتا ہے اور بحیرہ عرب میں جا گرتا ہے ۔ یہ صوبہ سندھ کا دوسرا بڑا ضلع ہے ۔ اس کا کل رقبہ 17355 مربع کلومیٹر ہے ۔ اس کا سب سے اہم ، مرکزی شہر اور دارالحکومت ٹھٹہ ہے ۔ 2017 ء کی مردم شماری کے مطابق یہاں کی آبادی 982,138 افراد پر مشتمل ہے ۔ یہاں مردوں کی تعداد خواتین کے مقابلے میں زیادہ ہے ۔ 82 فیصد آبادی دیہاتوں میں آباد ہے جبکہ 18 فیصد آبادی کا تعلق شہروں سے ہے ۔

یہاں کی شرح خواندگی 28 فیصد ہے ۔ مردوں میں خواندگی کی شرح 30 فیصد جبکہ عورتوں میں خواندگی کی شرح 20 فیصد ہے ۔ یہاں کے 97 فیصد آبادی کا تعلق اسلام سے ہے جبکہ باقی کی اقلیتوں میں سب سے زیادہ تعداد ہندوؤں کی ہے ۔ یہاں کی 92 فیصد آبادی سندھی زبان بولتی ہے ۔ ٹھٹہ کو یہ اہمیت حاصل ہے کہ ایشیا میں اسلام یہیں سے پھیلا تھا ۔ ایشیا کی سب سے پہلی مسجد ٹھٹہ میں ہی واقع ہے ۔ یہاں بے شمار عالم دین پیدا ہوئے اور بہت سے عالم دین آج بھی ٹھٹہ کی سرزمین پر ابدی نیند سو رہے ہیں ۔

مغلیہ عہد میں ٹھٹھہ ایک انتہائی متحرک اور ترقی یافتہ شہر تھا لیکن برطانوی راج میں ٹھٹھہ کی بجائے کراچی کو اہمیت دی گئی اور کراچی میں بندر گاہیں قائم ہونے کے بعد ٹھٹہ اپنی اہمیت کھو بیٹھا ۔

اس ضلع کو درج ذیل تحصیلوں اور ذیلی تحصیلوں میں تقسیم کیا گیا ہے ۔
تحصیل ٹھٹہ
تحصیل میرپور ساکرو
تحصیل کیٹی بنڈر
تحصیل غور باری

یہ بھی پڑھیں
ضلع بدین

ضلع ٹھٹہ” ایک تبصرہ

Leave a Reply