حضرت امام حسن علیہ السلام

حضرت امام حسن علیہ السلام کا عفو و درگزر

ایک مرتبہ حضرت امام حسن علیہ السلام اپنے کچھ ساتھیوں کے ساتھ بیٹھے ہوئے کھانا کھا رہے تھے ۔ اتنے میں ایک غلام آپ رضی اللہ تعالی عنہ کے پاس سالن کا ایک برتن لے کر آیا ۔ جب وہ سالن کا برتن آپ کے پاس لے کر پہنچا تو اس کے ہاتھ سے برتن چھوٹ کر نیچے گر گیا ۔

برتن اس کے ہاتھ سے چھوٹتے ہی سالن حضرت امام حسن علیہ السلام کے اوپر گرا ۔ جب اس غلام سے یہ سب کام سرزد ہوگیا تو وہ غلام بہت زیادہ گھبرا گیا اور حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کے سامنے یہ آیت پڑھی ۔

والکاظمین الغیظ
یعنی جو غصے کو پی جانے والے ہیں ۔
تو حضرت امام حسن رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ نے یہ آیت سنتے ہی فرمایا کہ میں نے غصے کو پی لیا ہے ۔ اس پر غلام نے آیت کا اگلا حصہ بھی پڑھ دیا ۔
والعافین عن الناس
یعنی وہ لوگوں سے درگزر کرنے والے ہیں ۔
حضرت امام حسن رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ نے فرمایا کہ جاؤ میں نے معاف کیا ۔ تو اس غلام نے حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کے سامنے آیت کا اگلا حصہ بھی پڑھ دیا ۔
واللہ یحب المحسنین
یعنی اور اللہ احسان کرنے والوں کو پسند کرتا ہے ۔
تو حضرت امام حسن رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ نے غلام سے فرمایا جاؤ میں نے تمہیں آزاد کر دیا ۔

یہ بھی پڑھیں
وہ لوگ جو کردار کی بلندیوں پر پہنچے

حضرت امام حسن علیہ السلام کا عفو و درگزر” ایک تبصرہ

Leave a Reply