نماز عشاء

نماز عشاء پڑھنے والے کے لیے دوزخ سے آزادی

حضرت انس رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ سرکارِ مدینہ راحت قلب و سینہ حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ تعالی علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم نے ارشاد فرمایا مفہوم ہے کہ : جس شخص نے 40 دن فجر اور عشاء کی نماز باجماعت پڑھی اس کو اللہ تبارک و تعالیٰ دو آزادیاں عطا فرمائے گاایک نار (یعنی آگ ، جہنم ) سے ، دوسری نفاق(یعنی منافقت) سے (آزادی ) ۔ (تاریخ بغداد ، 7 / 98)

حضرت عثمان غنی رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ حضور نبی کریم خاتم النبیین راحۃ العاشقین مراد المشتاقین حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم نے ا رشاد فرمایا مفہوم ہے : جو نماز عشاء جماعت سے پڑھے تو گویا اس نے آدھی رات قیام کیا اور جو کوئی فجر جماعت سے پڑھے گویا اس نے پوری رات قیام کیا ۔ (مسلم ، ص258 ، حدیث : 1491)

امیر المؤمنین حضرت عمر فاروق اعظم رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ : سرکار دو عالم صلی اللہ تعالی علیہ وآلہ واصحابہ وبارک وسلم کا فرمان عالی شان ہے : جو 40 راتیں مسجد میں باجماعت نماز عشاء پڑھے ، کہ پہلی رکعت بھی فوت نہ ہو ، اللہ رب العزت اس کے لئے دوزخ سے آزادی لکھ دیتا ہے۔ (ابن ماجہ ، 1 / 437 ، حدیث : 797)

نماز اور اس کی اقسام

Leave a Reply