بازو اور پاؤں کٹے شخص سے شادی کرنیوالی لاہوری لڑکی

یوں تو صدیوں سے محبت کی بےمثال داستانیں چلتی آرہی ہیں لیکن اس ترقی یافتہ دور میں لاہور کی باہمت ثناء نامی نوجوان لڑکی نے دونوں ہاتھ اور ایک پاؤں کٹے شخص سے شادی کرکے محبت کی نئی داستان رقم کردی ہے۔

برطانوی نشریاتی ادارے کی ایک رپورٹ کے مطابق لاہور سے تعلق رکھنے والے پریمی جوڑے ثناء اور داؤد کی زندگی میں اچانک خوفناک موڑ آگیا۔

داؤد کے ساتھ ایک دن حادثہ پیش آیا، وہ اپنے گھر کی چھت پر لوہے کا ڈنڈا لیکر جارہا تھا کہ اچانک وہ بجلی کی تاروں پر لگ گیا جس کی وجہ سے داؤد بری طرح سے جھلس گیا، ڈاکٹرز نے داؤد کے دونوں بازوں اور ایک ٹانگ کاٹ دی۔

داؤد اپنے ساتھ پیش آنے والے افسوسناک واقعے کی وجہ سے شدید افسردہ تھا، ایسے میں ثناء نےاس معذوری کے باوجود داؤد سے شادی کرنے کا فیصلہ کیا۔

اس فیصلے پر ثناء کے گھر والے بالکل بھی راضی نہیں تھے لیکن ثناء نے اپنے گھروالوں کے خلاف جاتے ہوئے داؤد سے شادی کرلی۔

اس حوالے سے ثناء کا کہنا تھا کہ اُنہوں نے داؤد سے وعدہ کیا تھا وہ ہر حال میں داؤد کے ساتھ رہیں گی۔

ثناء نے کہا کہ داؤد کے بازو اور ٹانگ کٹنے کی وجہ سے اُن کی محبت داؤد کے لیے کم نہیں ہوئی ہے اور وہ اپنی آخری سانس تک داؤد کا ساتھ دیں گی۔

اُنہوں نے کہا کہ اگر خدا نے داؤد کے بازو لے لیے ہیں تو کیا ہوا، اب وہ داؤد کے بازو بنیں گی اور اُنہیں کسی چیز کی کمی محسوس نہیں ہونے دیں گی۔

Leave a Reply