کولیسٹرول کا پتا لگانے

کولیسٹرول کا پتا لگانے والی نئی ٹیکنالوجی

(ہم دوست نیوز): کولیسٹرول کا پتا لگانے والی نئی ٹیکنالوجی

چینی اکادمی برائے سائنس اور جامعہ سائنس و ٹیکنالوجی نے مشترکہ طور پر کولیسٹرول کا اندازہ لگانے کا ایک بہت سادہ طریقہ وضع کیا ہے۔
اس طریقے میں کم استعمال ہونے والے ہاتھ کو الکحل سے صاف کیا جاتا ہے۔ پھر اس جگہ پر ایک چھلا چپکا دیا جاتا ہے۔

اس کے بعد ہاتھ کو اسکیر پر رکھا جاتا ہے تاکہ چھلا اسکینر کے ساتھ فٹ ہو جائے۔خیال رہے کہ کم استعمال ہونے والا ہاتھ زیادہ نرم ہوتا ہے جس کو پڑھ کر’کولیسٹرول‘ کا اندازہ لگانا آسان ہوتا ہے۔

جس طرح جلد سے روشنی ٹکراکر بکھرتی یا جذب ہوتی ہے بالکل اسی طرح روشنی کی خاص کیفیت کا اندازہ لگایا جاتا ہے۔ جس کے بعد چھلے والی جگہ پر ایک مائع کیمیکل لگایا جاتا ہے۔ اب پھر دوبارہ جلد کو اسکین کیا جاتا ہے۔

جلد میں کولیسٹرول کی معمولی مقدار بھی ہو تو وہ اس کیمیکل سے چمکنے لگتی ہے اور یوں جلد کی روشنی کا رنگ بدل جاتا ہے۔ اب پہلے اور دوسرے اسکین کا باہم موازنے کر کہ اس طرح مریض کے جسم میں کولیسٹرول کی مقدار کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے۔

اس طریقے کو 121 مریضوں پر آزمایا گیا جو دل کی شریانوں کے مرض میں مبتلا تھے۔ اس نئے سسٹم نے بہت درستگی کے ساتھ کولیسٹرول کی پیمائش کی۔

Leave a Reply